میاں نوازشریف کے بعد اب شہباز شریف کے ساتھ کیا ہونیوالا ہے؟ جاوید چودھری کا بیان

میاں نوازشریف کے بعد اب شہباز شریف کے ساتھ کیا ہونیوالا ہے؟ جاوید چودھری کا بیان




لاہور(آن لائن اردو نیوز) ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ سینیئر صحافی جاوید چودھری نے اپنے ایک پروگرام میں کہا ہے کہ ہماری حالت یہ ہے کہ ہم خود غلطیاں کرکے کے بھی وکیل بنے ہوتے ہیں اور اپنی غلطی کو جسٹی فائی کرنے کیلئے لمبی لمبی دلیلیں دیتے ہیں۔ لیکن اگر ہمارے سامنے کسی دوسرے کی غلطی رونما ہو جائے تو ہم وکیل سے جج بن جاتے ہیں اور ہم فیصلے کرنے لگ جاتے ہیں۔ ذرائع کے مطابق جاوید چودھری نے میاں نواز شریف کو نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ میاں نواز شریف بھی آج کل وکیل بنے ہوئے ہیں اور دلائل کی بوچھار کررہے ہیں۔ لیکن سوچنے کی بات یہ ہے کہ جب دومرتبہ بے نظیربھٹو، یوسف رضا گیلانی، بمحمد خان جونیجو اور غلام مصطفیٰ جتوئی کو نواز شریف کی مدد سے ہٹایا گیا تھا کیا تب ستیاناس نہیں ہوا تھا، کیا اس وقت ملک میں انتشار پیدا نہیں ہوا تھا۔ اگرماضی میں وزرا اپنے عہدے سے دستربردار ہوتے رہے ہیں تو اس میں نواز شریف کا بھی ایک بڑا حصہ ہوتا تھا۔ جب تک سابق وزیراعظم میاں نواز شریف خود یہ کام کرتے رہے ہیں تب تک یہ سب ٹھیک تھا، ملک کی خدمت تھی۔ لیکن جب یہی واقعہ انکے ساتھ پیش آیا تو ستیاناس بھی ہوگیا اور نواز شریف کو ملک تباہ ہوتا بھی نظر آرہا ہے۔ جاوید چودھری نے مزید کہا کہ اگر ہم صحیح معنوں میں ملک کو تبدیل کرنا چاہتے ہیں تو ہمیں اپنی غلطیوں کی وکالت کرنا بھی چھوڑنی ہوگی اور دوسروں کے معاملات میں جج بننا بھی بند کرنا ہوگا۔ جاوید چودھری نے مزید کہا کہ میاں نواز شریف کے بعد اب وزیراعلٰی شہباز شریف بھی پھنستے ہوئے نظر آ رہے ہیں۔ جاوید چودھری نے کہا کہ ایک طرف علامہ طاہر القادری میاں شہباز شریف اور رانا ثناء اللہ کو سانحہ ماڈل ٹاؤن کا ذمہ دار قرار دے رہے ہیں اور دوسری طرف پیر صاحب سیال شریف نے حکومت سے علیحدگی کر لی ہے اور دس دسمبر سے فیصل آباد میں جلسے بھی ہو گا۔ چودہ ایم پی ایز کے استعٖفے اور رانا ثنااللہ کے استعفٰی کیلئے بھرپور احتجاج کا اعلان کر دیا گیا ہے۔ جاوید چودھری نے آخر میں کہا کہ کیا اب نواز شریف کے بعد شہباز شریف کا نمبر ہے؟؟




Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *