Talib Hashmi Unique Ghazals

      No Comments on Talib Hashmi Unique Ghazals
Talib Hashmi Unique Ghazals

طالبؔ ہاشمی صاحب کی عمدہ غزلیں قارئین کرام کے لیے پیش خدمت ہیں۔

ہم پہ احساں ہے کوئی وعدہ وفا ہو جانا
فطرتِ یار ہے پَل پَل میں خفا ہو جانا

صرف یہ سوچ کے ہم ہاتھ اُٹھائے رکھے
اس کی مرضی پہ ہے مقبولِ دعا ہو جانا

پھول کے بس میں نہیں روک کے رکھے اس کو
کام خوشبو کا ہے لمحوں میں ہوا ہو جانا

زلفِ محبوب میں جو ہوگیا اِک بار اسیر
ایسے قیدی کا تو مشکل ہے رِہا ہو جانا

خود نمائی کا تو الزام نہیں آئے گا
اس امیری سے تو بہتر ہے گدا ہو جانا

سب سے جھُک جھُک کے ہمیں ملنا پڑےگا طالبؔ
غیر ممکن تو نہیں قد کا بڑا ہو جانا

Talib Hashmi Beautifl Ghazals

Talib Hashmi Unique Ghazals

اک حقیقت ہے یا گماں جاناں
ہر جگہ ہے ترا نشاں جاناں

ایک تیرا ہی نام رٹتی ہے
تیری خاطر ہے یہ زباں جاناں

پاس تم تھے بہار تھی ہر سو
اب تو ہے موسمِ خزاں جاناں

آتشِ غم سے ہر حسیں منظر
ہوگیا ہے دھنواں دھنوں جاناں

تیرے قدموں کی خاک لگتی ہے
آسماں پر یہ کہکشاں جاناں

دل کے گلشن میں پھول سوکھ چکیں
اب نہیں آتی تتلیاں جاناں

تیرے در کا ٹھکانہ مل جائے
تیرا طالبؔ ہے بے اماں جاناں

Talib Hashmi Poetry In Urdu

ghazals-of-talib-hashmi-3

میرا اک اک خواب سلونا تیرے نام
ہیرے’ موتی’ چاندی’ سونا تیرے نام

تُو خوشبو ہے چاہے جہاں پر بس جائے
وادیِ دل کا کونا کونا تیرے نام

ہم کیا تپتی ریت کو قسمت کر لیں گے
پھولوں کا رنگین بچھونا تیرے نام

خواب محل میں بن دستک بھی آنا ہے
کر دیا اپنا جاگنا سونا تیرے نام

میں نے تجھ پہ وار دی اپنی سب خوشیاں
پلکوں کو اشکوں سے بھگونا تیرے نام

اب جو ہوگا میرا دیکھا جائے گا
کر دیا اپنا رونا دھونا تیرے نام

طالبؔ تو ہی ہم کو بتادے کیسے کردوں
ٹوٹا پھوٹا دل کا کھلونا تیرے نام

Talib Hashmi Best Ghazals

Talib Hashmi Unique Ghazals

تیری تصویر بناؤں گا، چلا جاؤں گا
رونقِ بزم بڑھاؤں گا، چلا جاؤں گا

محفلِ یار میں لفظوں کے گہر لایا ہوں
چند اشعار سناؤں گا، چلا جاؤں گا

ہے عقیدت مری منصوب ترے کوچے سے
خاک ماتھے پہ لگاؤں گا، چلا جاؤں گا

بے یقینی کی فضاؤں میں ٹھہرنا کیسا
تجھ کو آئینہ دکھاؤں گا، چلا جاؤں گا

دشت میں کون ٹھہرتا ہے تمہیں کیا معلوم
جب بھی میں ہوش میں آؤں گا، چلا جاؤں گا

تُو نبھائے نہ نبھائے مجھے پرواہ نہیں
اپنا وعدہ میں نبھاؤں گا، چلا جاؤں گا

شہرِ طالبؔ میں ہر اک سمت اندھیرا ہے بہت
پیار کی شمعیں جلاؤں گا، چلا جاؤں گا

Talib Hashmi

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *