Mera Kamra By Khalida Zulf

      No Comments on Mera Kamra By Khalida Zulf
Mera Kamra By Khalida Zulf

میرا کمرہ

ازقلم: خالدہ زلف

جی ہاں میرا بھی ایک چھوٹا سا کمرہ ہے۔ یہ صرف کمرہ ہی نہیں بلکہ میری جنت ہے۔ مجھے اپنے کمرے کے سوا کہیں نیند نہیں آتی۔ جتنا سکون مجھے اپنے کمرے میں آتا ہے شاید ویسا ہی سکون مجھے قبر میں ملے۔ میرے کمرے میں دوکھڑکیاں ہیں۔ کبھی میں ایک کھڑکی سے باہر جھانکتی ہوں تو کبھی دوسری کھڑکی سے۔ کوئی روکنے ٹوکنے والا نہیں۔

میں دروازہ بند کرکے ڈانس کروں یا گانا گاؤں میری مرضی۔ اپنی مرضی سے نیند کروں اپنی مرضی سے جاگوں۔ کسی کو اجازت نہیں دیتی کہ کوئی مجھے ڈسٹرب کرے۔ میرے کمرے میں میرے خوبصورت سپنے ہیں۔ انمول یادیں ہیں، پیارکی مہک میرے کمرے کو خوبصورت بنا دیتی ہے۔ میں جب شام کو کھڑکی کے پاس بیٹھ کر چائے پیتی ہوں تومجھے بہت اچھا لگتا ہے۔

Mera Kamra By Khalida Zulf

آسمان خوبصورت لگتا ہے، پرندے جو شام کو واپس اپنے گھونسلے میں جاتے ہیں تو وہ بہت ہی پیارے لگتے ہیں۔ سب کو خوش دیکھ کر مجھے بھی بہت خوشی ہوتی ہے۔ رات کو کھڑکی سے چاند بہت پیارا دکھتا ہے۔ چاند کو دیکھ کر شاعری کرنے کو دل کرتا ہے۔ میرا کمرہ بہت خوبصورت ہے۔ میرا کمرہ میری دنیا ہے جہاں میں خود کو محفوظ سمجھتی ہوں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *