آج کی شخصت جمیل الدین عالی صاحب

آج کی شخصت جمیل الدین عالی صاحب

انتخاب: مہر خان

جیوے جیوے پاکستان کے تخلیق کار معروف ادیب، شاعر اور مفکر جمیل الدین عالی کی وفات 23نومبر 2015 ہوئی۔ اردو کے معروف شاعر، ادیب، کالم نگار اور منتظم، اصل نام مرزا جمیل الدین عالی تھا۔ وہ بیس جنوری انیس سو پچیس کو دہلی میں پیدا ہوئے تھے۔ انہوں نے اینگلو عربک کالج دہلی سے گریجویشن کیا۔ قیام پاکستان کے بعد کراچی میں اقامت اختیار کی اور سرکاری ملازمت سے وابستہ ہوئے۔

انیس سو انسٹھ میں پاکستان رائٹرز گلڈ کے قیام میں فعال حصہ لیا اور اس کے سیکریٹری مقرر ہوئے۔ انیس سو اکسٹھ میں بابائے اردو مولوی عبدالحق کی وفات کے بعد انجمن ترقی اردو کے سیکریٹری مقرر ہوئے۔ شعری مجموعوں میں غزلیں دوہے گیت، لاحاصل، جیوے پاکستان، انسان اور کلیات اے میرے دشت سخن شامل ہیں۔ سفرنامے دنیا میرے آگے اور تماشا میرے آگے کے نام سے شائع ہوچکے ہیں۔ کالموں کے دو مجموعے صدا کر چلے اور دعا کر چلے بھی شائع ہوئے۔

حکومت پاکستان نے انہیں ہلال امتیاز، ستارہ امتیاز اور صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی کے اعزازات اور جامعہ کراچی نے ڈاکٹریٹ کی اعزازی سند عطا کی تھی۔ وہ متحدہ قومی موومنٹ کی نامزدگی پر سینیٹ آف پاکستان کے رکن بھی رہ چکے تھے۔

جمیل الدین عالی کے چند معروف ملی نغمے

جیوے جیوے پاکستان
اے وطن کے سجیلے جوانو
ہم مصطفوی مصطفوی مصطفوی ہیں
میرا پیغام پاکستان
جو نام وہی پہچان – پاکستان پاکستان
اتنے بڑے جیون ساگر میں تو نے پاکستان دیا

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *