Faisal Marolawi Introduction And Lyrics

Faisal Marolawi Introduction

فیصل مارولوی صاحب کا تعارف اورکلام

تعارف
فیصل مارولوی صاحب کا تعلق انڈیا سے ہے۔ فیصل مارولوی صاحب 5 جون 1976 میں پیدا ہوئے، آپکا اصلی نام سید شاہ فیصل شاہجہان علی ہے مگر جب قلم سے رشتہ جُڑا تو آپ نے اپنا قلمی نام فیصل مارولوی رکھ لیا۔ آپ نے ایس ایس سی اور ڈی ایڈ مارول ہی سے کیا اور روزگار کی تلاش میں 1995 میں ممبئ کوچ کر گئے، شروعات میں کوچنگ کلاسوں میں تدریسی خدمات انجام دینے کے بعد ایک اردو میڈیم اسکول مفتاح العلوم اردو ہائی اسکول ساکی ناکہ ممبئ میں پرمننٹ ملازمت جون 1997 میں حاصل کرلی۔

فیصل مارولوی صاحب نے اپنے تعلیمی سلسلے کو جاری رکھتے ہوئے جلگاؤں کے اقرا کالج سے بی اے کی ڈگری لی بعد میں ایم اے نوتن مراٹھاکالج جلگاؤں سے اردو مضمون سے کیا، یشونت راو چوہان یونیورسٹی سے بی ایڈ کی ڈگری حاصل کی۔

آئیں فیصل مارولوی صاحب کو مزید انکے کلام کے ذریعے جانتے ہیں۔

Faisal Marolawi Lyrics

تم کو مے کش چلے یا جواری چلے
بات بس اک نہ لیکن ہماری چلے

جو ہنر میں خوشامد کے مشاق ہو
اس کی جے جے چلے اس کی یاری چلے

منظر کو چھوڑیے پس منظر بھی دیکھیے
ہے آستین میں چھپا خنجر بھی دیکھیے

تحقیق وجستجو سے بھی لیں کار آگہی
مخفی یہ کائنات کے جوہر بھی دیکھیے

Faisal Marolawi Lyrics

کاموں میں خیر کے جو بڑھتا ہے زور سے
ڈرتا نہیں ذرا بھی وہ باطل کے شور سے

پیغام اس کا پیار وفا اور خلوص ہے
وہ سب کو باندھتا ہے اخوت کی ڈور سے

پسند کوئی بھی اس کو ذرا نہیں کرتا
جو سچ کے کہنے سے ہرگز ڈرا نہیں کرتا

اسے یقین تو اپنے خدا پہ ہوتا ہے
مخالفت کی وہ پرواہ ذرا نہیں کرتا

رشتے ناطے ٹوٹ رہے ہیں
جو اپنے تھے چھوٹ رہے ہیں

Faisal Marolawi Lyrics

موقع پاکر دیکھو دشمن
گھر کی رونق لوٹ رہے ہیں

کبھی خالی میرے در سے کوئی سائل نہیں جاتا
بنا رشوت مگر آگے کوئ فاعل نہیں جاتا

اگر چاہت ہو رفعت کی تو دم بھریے گا محنت کا
بلندی اورترقی پر کوئی کاہل نہیں جاتا

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *