Ahmad Faraz Romantic lyrics In Urdu

Ahmad Faraz Romantic lyrics In Urdu

احمد فرازؔ صاحب کے مجموعے’’غزل بہانہ کروں‘‘ سے منتخب اشعار

انتخاب: عبداللہ نعیم رسول

کروں نہ یاد مگر کس طرح بھلاؤں اسے
غزل بہانہ کروں اور گنگناؤں اسے

یہ جو سر گشتہ سے پھرتے ہیں کتابوں والے
ان سے مت مل کہ انہیں روگ ہیں خوابوں والے

اب تو سب دشنہ و خنجر کی زباں بولتے ہیں
اب کہاں لوگ محبت کے نصابوں والے

سنا ہے کل جنہیں دستارِ افتخار ملی
وہ آج اپنے سروں کو تلاش کرتے ہیں

ھاؤں میں بیٹھنے والے ہی تو سب سے پہلے
پیڑ گرتا ہے توآ جاتے ہیں آرے لے کر

Ahmad Faraz Romantic lyrics In Urdu

Ahmad Faraz Romantic lyrics In Urdu

صیّاد نےپہلے تو رہائی کی خبر دی
پھر ڈال دئیے اس نے مرے پر مرے آگے

کس اسم کی برکت ہے کہ ایوانِ سخن میں
کھلتا ہی چلا جاتا ہے ہر در مرے آگے

یہ مرا حسنِ نظر ہے تو دِکھا دے کوئی
قامت و گیسو و رخسار و دہن تم جیسے

زندگی!اس سے زیادہ تو نہیں عمر تری
بس کسی دوست کے ملنے سے جدا ہونے تک

خیالِ یار کا بادل اگر کھلا بھی کبھی
تو دھوپ پھیل گئی جا بجا اداسی کی

دعوائے وفا پر بھی طلب دادِ وفا کی
اے کشتۂ غم تجھ کو حیا تک نہیں آئی

ہر چند فرازؔ ایک فقیرِ سرِ رہ ہوں
پر مملکتِ حرف مرے نام میں آئی

Ahmad Faraz Romantic lyrics

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *