Aatif Saeed Best Pomes | Aatif Saeed Poetry In Urdu

Aatif Saeed Best Pomes

تمہارے لیے

سنو
تمہارے لیے ہی لفظوں کی یہ بزم سجائی ہے
وہ لفظ جو بکهرے ہوئے موتیوں کی طرح تهے
اپنی جگہ مکمل،مگر بے معنی
یہ موتی میرے اردگرد بکهرے ہوئے تهے
میں روز انہیں یونہی روندے ہوئے گزر جاتا
مگر پهر اچانک تم مل گئیں
تمہاری محبت غیر محسوس طریقے سے میری رگوں میں دوڑنے لگی
محبت
جس کے بارے کہتے ہیں “ذات کی تکمیل ہوتی ہے
کائنات کا خوبصورت ترین جذبہ
اور تم نے مجهے سر سے پاوں تک محبت کردیا
میں یہ اقرار کرتا ہوں
کہ تم نے،تمہاری محبت نے مجهے ان بکهرے موتیوں کو پرونا سکهایا
میرے جذبے اپاہج تهے
تم نے قلم کے ذریعے انہیں چلنا سکهایا
اور اس کے بعد میں نے تمہارے سنگ گزارا ہر لمحہ تصویر کرلیا
جذبوں کو لفظوں کے قالب میں ڈهال دیا
وہ کبهی نظم کی صورت اور کبهی غزل کا روپ میں ڈهل گئے
تبهی تو تم محسوس کرسکتی ہو
کہ میری شاعری کےپہلو میں تم دل بن کے ڈهڑکتی ہو
تم نے میرے لئے اتنا کیا اور میں تمہارے لئے کچهہ نہ کرسکا
تمہارے ساتهہ چلنے کی خواہش تهی مگر نا چل سکا
میری مجبوریاں میرے پاوں کی بیڑیاں بن گئیں
مگر مجهے اپنا وعدہ یاد ہے
کہ میں لفظوں کے موتیوں سے جتنی بهی مالائیں بناؤں گا
سب تمہارے لئے ہوں گی
میں آج اس عہد کی تجدید کرتا ہوں

اس اقرار کے ساتھ کہ مجهے تم سے محبت ہے
وہ محبت جو ذات کی تکمیل ہوتی ہے

Aatif Saeed Beautiful Poems

Aatif Saeed Best Pomes

تمہیں میں دوست کہتا تھا
تمہیں اپنا سمجھتا تھا
عجب اک خوش گمانی سی
مجھے دن رات رہتی تھی
کہ تم بھی دوست ہو میری
مجھے اپنا سمجھتی ہو
مرے ہونے نہ ہونے سے تمہیں بھی فرق پڑتا ہے
مگر میں آج سمجھا ہوں کہ ایسا ربط ہی کب تھا
بپت ہی تلخ ہے لیکن مجھے یہ بات کہنی ہے
مری وہ خوش گمانی مر گئی ہے آج سینے میں
مجھے معلوم ہے آنسو مری پوروں پہ مہکیں گے
میں اجڑی آرزوؤں کے کئی نوحے بھی لکھوں گا
مگر میں کیا کروں شاید یہی قسمت میں لکھا ہے

Aatif Saeed Poetry In Urdu

Aatif Saeed Best Pomes

بہت نادان ہو تم بھی
بہت خوش فہم رہتی ہو
تمہیں یہ علم ہی کب ہے
کہ غم بے اعتنائی کا
ہر اک غم سے بڑا غم ہے
اور اس حیرت بھرے غم کی جو شدت ہے
سمجھ لو وہ کسی سوری سے کم ہو یی نہیں سکتی
یہ اسا زخم ہے جو لاکھ چاہیں بھر نہیں سکتا
یہ ایسے اشک ہیں جو لاکھ چاہیں رو نہیں سکتے
یہ وہ پودا ہے کہ جو کاٹنے سے اور بڑھتا ہے
تمہیں یہ علم ہی کب ہے
مرے اندر جو ٹوٹا ہے وہ واپس جڑ نہیں سکتا
مجھے تم سے یہ کہتا ہے
تمہارا اور میرا ساتھ بس اتنا ہی تھا شاید
تمہارے ساتھ گذرے وقت کو میں یاد رکھوں گا
کسی بھی بات سے میری تمہارا دل دکھا ہو تو
مجھے تم معاف کر دینا
میں چلتا ہوں خدا حافظ

Aatif Saeed Best Pomes

عجب سی یہ محبت ہے
عجب سا ربط ہے ہم میں
نہ اک دوجے کو دیکھا ہے
نہ اک دوجے کی آوازوں میں اک دوجے کو ڈھونڈا ہے
تمہیں جو کچھ کہا میں نے، اُسے تم سچ سمجھتی ہو
مجھے جو کچھ کہا تم نے ، اُسے میں سچ سمجھتا ہوں
اِسی اک چیٹ ونڈو میں
ہم اِک دوجے کے جیون کے ہر اِک موسم میں رہتے ہیں
عجب سا ربط ہے ہم میں
عجب سی یہ محبت ہے
جسے تصویر اور آواز سے کچھ بھی نہیں لینا
جسے خواہش نہیں کوئی
کِسی کو رُوبُرو دیکھیں
کِسی آواز کو پُوجیں
محبت کی شباہت کو
کِسی انمول ساعت کو
کِسی کے عکس میں ڈُھونڈیں
عجب سی یہ محبت ہے
کہ جس میں لفظ کہتے ہیں اور آنکھیں کچھ نہیں کہتیں
یہ لفظوں سے بہلتی ہے، یہ اُن میں سانس لیتی ہے
یہ ان بےجان تصویروں میں کتنے رنگ بھرتی ہے
عجب سا ربط ہے ہم میں
عجب سی یہ محبت ہے
جسے آواز اور تصویر سے کچھ بھی نہیں لینا
کہ جو لفظوں کی خوشبو سے دلوں کو گنگناتی ہے
کہ جو پلکوں پہ چاہت کے ہزاروں خواب لکھتی ہے
تمہارے اور میرے درمیاں جو سانس لیتی ہے
عجب سی وہ محبت ہے…!!
Aatif Saeed

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *