Bazm-E-Arbab-E-Sukhan Ke Zair-E-Ihtimaam Aalmi Online Mushaaira

Bazm-E-Arbab-E-Sukhan Ke Zair-E-Ihtimaam Aalmi Online Mushaaira

“بزم اربابِ سخن” کے زیرِ اہتمام عالمی آن لائن مشاعرہ

رپورٹ: ڈاکٹر حناء امبرین

مشاعرہ صرف روایت ہی نہیں ہماری ثقافت کا بھی حصہ ہے۔ ادب کی ترقی وترویج میں مشاعرے نے مرکزی کردار ادا کیا ہے۔

whatsapp-image-2017-03-04-at-4-26-05-pmشعرکی ترقی کے لئے عوام الناس تک شعراء حضرات اپنے خیالات کو پہنچانےکا ذریعہ مشاعرہ ہی ہوا کرتا تھا۔ آج برقی ترقی نے ہمیں اس قدر قریب کر دیا ہے کہ ایک دوسرے سے کوسوں دور بیٹھ کر بھی نہ صرف ہم ایک دوسرے کو سن سکتے ہیں بلکہ دیکھ بھی سکتے ہیں۔اور اپنے خیالات اشعار کے ذریعے پہنچا سکتے ہیں۔

img_4743

“بزم ارباب سخن ” وہ ادبی گروپ ہے جس نے اس سے فائدہ اٹھاتے ہوئے ایک آن لائن صوتی مشاعرہ کا انعقاد کیا۔ یہ اس گروپ کا پہلا اور انتہائی کامیاب مشاعرہ قرار پایا۔ مشاعرہ جمعہ 3 مارچ 2017 کو پاکستان کے مقامی وقت کے مطابق شام 7 بجے منعقد ہوا جس میں دنیا بھر سے منجھے ہوئے شعراء نے شرکت کی۔ اس عظیم الشان مشاعرے کی صدارت عالی مرتبت استادالشعراء محترم مختار تلہری(بریلی، انڈیا) نے کی۔ جبکہ نظامت کے فرائض زبان و بیان پرعبور رکھنے والے مخصوص لب و لہجے کے حامل محترم المقام جناب آفتاب ترابی صاحب(جدّہ، سعودی عربیہ) نے انجام دی۔

مشاعرے کے مہمانانِ خصوصی۔ محترم جناب جواز جعفری(پاکستان) اور محترم المقام جناب فیّاض وردگ(کویت) تھے۔ مہمانانِ اعزازی، محترمہ ڈاکٹر حنا امبرین صاحبہ (ریاض، سعودی عربیہ) محترم جناب شفاعت فہیم (امروھہ، انڈیا) عالی مرتبت جناب عبدالرزّاق ایزد (لاہور، پاکستان) اور عالی مقام محترم اسلم بنارسی(بنگلور-انڈیا) تھے۔

hina ambreen

مشاعرے کا آغاز حسب روایت حمد سے ہوا جسکی سعادت سینئر استاد شاعر جناب ڈاکٹر ساجد شاہ جہاں پوری نے حاصل کی۔ بعد ازاں جناب عبدالرزاق ایزد نے نعتِ رسولِ مقبول کا نذرانہ پیش کیا۔

whatsapp-image-2017-03-04-at-4-26-03-pm

جناب آفتاب ترابی صاحب
سکوں دیتے ھوئے رس گھولتی ھے میرے کانوں میں
یہی اردو زباں میٹھی ھے عالم کی زبانوں میں

شہزاد نیر صاحب
ترا گیلا ہاتھ جو ہٹ گیا مرے بھیگے بھیگے وجود سے
مجھے ڈھانپ لینا ہے آگ نے، مجھے چاک سے نہ اتارنا

اسلم بنارسی ،بنگلور انڈیا
غلط کردار سے عزت بکی ہے انکی، آنوں میں،
تعین جن کا ہو تا تھا، بڑے اعلیٰ گھرانوں میں

img_4727

ڈاکٹر ساجد شاہجہاں پوری
سکوں کی سانس لیتے ہیں یہ اڑ کے آسمانوں
رہے ہیں کیا کبھی آذاد پنچھی بھی قید خانوں میں

عبد الرزاق ایزد
وہ جس نے آج مجھ کو دیکھ کر چُپ سادھ لی ایزدؔ
کبھی شامل تها میں بھی اُس حسیں کے راز دانوں میں

img_4726

جناب ڈاکٹر شفاعت فہیم
جو شیشہ ہے وہی شیشہ نہیں ہے
جو پتھر ہے وہی پتھر نہیں ہے

img_4742

جناب فیاض وردگ ،کویت
ترے بن زندگی مجھ کو گران معلوم ہوتی ہے
بدن میں موجِ آتش سی رواں معلوم ہوتی ہے

jafar-budhanavi

ڈاکٹر جواز جعفری ،لاہور، پاکستان
زمیں پہ روشنی کا سلسلہ بناتے ہوۓ
میں کڑ رہا ہوں ہوا سے دیا بناتے ہوۓ

mukhtar

جناب مختار تلہری صاحب انڈیا
ذرا فرصت ملے مختار تب ان کی طرف دیکھوں
ابھی الجھا ہوا ہوں زندگی کے امتحانوں میں

ڈاکٹر حناءامبرین طارق
بیاں کیا کیجئے سوزِ دروں کو داستانوں میں
img_4728نکل کے تیر کب آتے ہیں واپس پھر کمانوں میں

مشاعرے کے دیگر شرکاء وقار نسیم وامق، شہزاد نیئر، عبدالرزاق ایزد امین اڈیرائی، ریحانہ کنول، عطا شاہکار، جاوید سلطان پوری، جعفر بڈھانوی، عبدالمقیت اعزازی، اویس خان، ڈاکٹرسراج گلاؤٹھوی ، نعیم حنیف سرفراز سحراورمخدوم بریلوی تھے۔

اس مشاعرے کی انفرادیت یہ تھی کہ دنیا بھر سے استاد شعراء اور مستند وصاحبِ دیوان شعراء اس میں شریک ہوئے اورایک سے بڑھ کر ایک کلام شامل رہا۔

img_4721

مشاعرے کے اختتام پر صدر مشاعرہ استاد جناب مختار تلہری صاحب نے اپنا دل پزیر کلام پیشکرنے کے بعد صدارتی خطبہ کے ساتھ اس گروپ کی بانی و سرپرست جناب ڈاکٹر ساجد شاہ جہاںپوری کے حق خاص دعاۓ صحت کی اور درزازئ عمر کی دعا بھی کی۔

جناب فیاض وردگ صاحب نے بھی ڈاکٹر ساجد صاحب کے لئے خصوصی دعا کرتے ہوۓ فرمایا کہآللہ پاک انہیں ادب کی آبیاری کے لئے صحت و عافیت کے ساتھ سلامت رکھے۔دیگر شعراء حضراتبھی فرداً فرداً ان کی صحت و تندرستی کی دعائیں کرتے رہے۔ محترم ساجد صاحب نے اپنا فصیح وبلیغ کلام بھی عطا کیا۔

جناب ڈاکٹر جواز جعفری نے بزم ارباب سخن میں شامل ہونے پر انتہائی مسرت کا اظہار کرتے ہوۓکہا کہ یہ ان کی خوش قسمتی ہے کہ وہ ایک ایسے انفرادی گروپ میں شامل ہوۓ جس میں سبھی شعراء ایک نماں حیثیت اور مقام کے حامل ہیں اور ادب کے فروغ کے لئے شب و روز کوشاں ہیں۔

یہ مشاعرہ بزمِ ارباب ِ سخن  کی جانب سے پہلا آن لائن مشاعرہ تھا جس کی گونج دنیا کے ہر کونےتک پہنچی اور سامعین کو اپنی جانب مدعو کیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *