مجلسِ پاکستان کے زیراہتمام کشمیر کے حوالے سے کل جماعتی کانفرنس




ریاض (وقار نسیم وامق ) سعودی عرب میں کشمیری عوام سے اظہار یکجہتی اور مسئلہ کشمیر پر ٹھوس موقف اختیار کرنے کے حوالے سے مجلس پاکستان کے زیر اہتمام کل جماعتی کانفرنس کا انعقاد کیا گیا جس میں سیاسی ارکان کے علاوہ دیگر ادبی و سماجی تنظیموں کے افراد بھی شریک ہوئے۔

اس موقع پر اپنے صدارتی خطاب میں مجلس پاکستان کے صدر رانا عبدالروف کا کہنا تھا کہ کل جماعتی کانفرنس کا مقصد سب کے ساتھ ملکر حکومت پاکستان کو یہ پیغام پہنچانا ہے کہ مسئلہ کشمیر کے حل تک کشمیریوں کا مقدمہ ہر فورم پر لڑنا ہوگا اور کسی صورت اس مسئلے کو سرد نہیں پڑنے دینا کیونکہ بھارتی قابض فوج کشمیر میں ستر سال سے زائد عرصے سے ظلم وستم کے پہاڑ توڑ رہی ہے اگر کشمیری تمام تر ظلم سہنے کے باوجود پاکستان کے ساتھ الحاق کرنا چاہتے ہیں تو پھر ہمارا بھی فرض بنتا ہے کہ ہم ان کا بھرپور ساتھ دیں اور کشمیر کی تحریک آزادی کو آگے بڑھائیں تقریب کے دیگر شرکاء میں محمد اصغر قریشی نے کہا کہ پارلیمنٹ کے اندر ہمارے سیاستدانوں کو سنجیدہ رویہ اپنانا ہوگا مگر افسوس کے ساتھ کہنا پڑتا ہے کہ پارلیمنٹ کے سیشن میں اپوزیشن جماعتوں کی جانب سے کشمیر ایشو پر سنجیدگی نہیں دیکھائی جا رہی جس سے ملی یگانگت کا فقدان پایا جا رہا ہے حکمرانوں اور اپوزیشن کو کشمیر ایشو پر ایک ہونے کی ضرورت ہے حاجی احسان دانش نے کہا کہ ہم بطور کشمیری انتہائی مطمئن ہیں کہ پاکستان ہمارا مقدمہ بڑے احسن انداز سے لڑ رہا ہے اور ہاکستانی عوام ہمارے شانہ بشانہ ہے اور وہ دن اب دور نہیں ہے جب کشمیر پاکستان بنے گا کیونکہ کشمیریوں کا خون اب رنگ لانے والا ہے ریاض راٹھور نے حکومت وقت سے مطالبہ کیا کہ خارجہ پالیسی کو بہتر بنایا جاے اور دنیا بھر میں موجود پاکستانی سفراء کا ایک اجلاس بلایا جائے جس میں انہیں کشمیر کے حوالے سے مقدمہ لڑنے اور غیر ملکیوں کو کشمیر ایشو کی آگاہی کے حوالے سے روشناس کروایا جاے محمد خالد رانا نے کہا کہ کشمیر ایشو پر دوسری اور کوئی رائے نہیں ہے کہ ہم کشمیریوں کے ساتھ کھڑے ہیں اور ہم چاہتے ہیں کہ کشمیریوں کو انکا حق خودارادیت دیا جاے تاکہ وہ اپنی قسمت کا فیصلہ خود کر سکیں اقوام متحدہ کی قراردادیں اسی کا بھارت سے مطالبہ بھی کرتی ہیں ہمارا فرض ہے کہ کشمیر میں ہونے والے ظلم کو زیادہ سے زیادہ دنیا پر اجاگر کریں اور بھارت کا مکروہ چہرہ دنیا پر عیاں کریں خالد اکرم رانا نے کہا کہ پاکستان کشمیر سے ہے اور کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے مودی سرکار ہندو انتہا پسند سوچ کو ہوا دے رہی ہے اور بھارتی فوج کشمیر میں ظلمو ستم کرکے لوگوں سے جینے کا حق چھین رہی ہے اور انسانیت سوز مظالم ڈھا رہی ہے اقوام عالم کو چاہئیے کہ وہ اپنی آنکھوں سے پٹی اتارے اور حقیقت کا سامنا کرے کیونکہ دو بڑی ایٹمی طاقتیں کشمیر ایشو پر آمنے سامنے کھڑی ہیں وقار نسیم وامق نے پاکستانی سفیر راجہ علی اعجاز کا پیغام پڑھ کرسنایا جس میں کہا گیا تھا کہ سفارت خانہ پاکستان کیمونٹی کی جانب سے کشمیر ایشو ہونے والے اجتماعات کو سراہتا ہے پاکستانی کیمونٹی کو چاہئیے کہ وہ سعودی عرب سمیت دنیا بھر میں کشمیری عوام پر ہونے والے ظلم وستم کو اجاگر کرے اور بھارت کو بے نقاب کرے کل جماعتی کانفرنس کا ایک مشترکہ اعلامیہ بھی جاری کیا گیا جسے احسن عباسی نے پڑھ کر سنایا جس میں وزیراعظم پاکستان عمران خان سے مطالبہ کیا گیا کہ سلامتی کونسل میں خطاب سے قبل پاکستانی سیاسی جماعتوں کو اعتماد میں لیں تاکہ پوری قوم کی نمائندگی کو ممکن بنایا جاسکے اسکے علاوہ پوری دنیا کو یہ پیغام دینے کہ بھی ضرورت ہے کہ پوری پاکستانی قوم یکجان ہے اور کشمیر قوم کے ساتھ کھڑی ہے کانفرنس سے محمود احمد باجوہ، حامد میاں، حنیف بابر،اقبال ودود، کے علاوہ دیگر نے بھی خطاب کیا جبکہ کانفرنس میں نظامت کے فرائض مجلس پاکستان کے سیکرٹری جنرل حافظ عبدالوحید نے سرانجام دئیے

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *