وال سٹریٹ ایکسچیج نے ہو ر ال انز میں نئی شاخ کا آغاز




وال سٹریٹ ایکسچیج نے ہو ر ال انز میں نئی شاخ کا آغاز

دبئی (نمائندہ خصوصی )متحدہ عرب امارات میں ترسیلات زر کے لئے وال اسٹریٹ ایکسچیج نے دبئی کے علاقہ ہو ال انز میں نئی برانچ کا افتتاح کیا تاکہ صارفین کو ترسیلات زر کے لئے سہولیات فراہم کی جائیں
تفصیلات کے مطابق اس برانچ میں ایشائی ممالک کی کمیونٹی کو سہولیات فراہم کرنے کے لئے انہی ممالک سے سٹاف کو شامل کیا ۔
جنوری 2019میں جاری گلوبل میڈیا انسائٹ کی ایک رپورٹ میں یہ واضح کیا گیا ہے کہ 59.5فیصد آبادی جنوبی ایشیاءسے ہے جس میں بھارت سرفہرست اور پاکستان دوسرے نمبر پر ہے اس کے پیش نظر کمیوٹنی کے اسی علاقے میں اس برانچ سے جنوبی ایشیائی ممالک کے لوگوں کو ترسیلات زر میں آسانی ہو گی اس کے علاوہ کرنسی ایکسچیج کی سہولت بھی موجود ہو گی جس میں جدید ٹیکنالوجی کا استعمال لازم کیا گیا ہے
یاد رہے کہ ورلڈ بینک 2019کی رپورٹ کے مطابق متحدہ عرب امارات میں 200سے زائد قومیتیں موجود ہیں جن کی گل آبادی 9.68ملین ہے اور متحدہ عرب امارات نے تمام قومیتوں کو بلا تفریق کاروبار اور روزگار کے یکساں مواقع فراہم کئے گئے ہیں
متحدہ عرب امارات کے سنٹرل بینک کے جاری کردہ حالیہ اعداد و شمار نے یہ بھی ظاہر کیا ہے کہ 2019 کی پہلی سہ ماہی میں ، بیرون ملک ترسیلات زر AED 38.41 بلین تک پہنچ گئیں۔ سب سے زیادہ ترسیل بھیجنے والے ہندوستانی تھے (37.4 فیصد کے ساتھ) ، اس کے بعد پاکستانی (10.2 فیصد) ، فلپائن (7.9 فیصد) ، مصری (6 فیصد) ، بنگلہ دیشی (4.6 فیصد) ، امریکی (3.4 فیصد) ، برطانیہ کے شہری (3.3 فیصد) ) ، اردنی باشندے (2.4 فیصد) ، چینی (2.1 فیصد) ، اور سوئس (1.9 فیصد) شامل ہیں
وال اسٹریٹ ایکسچینج ، کرنسی ایکسچینج ، رقم کی منتقلی ، اور ادائیگیوں جیسے مالی لین دین میں سہولت فراہم کرکے ، متحدہ عرب امارات میںاپنی خدمات کو بڑھا رہا ہے جو کہ خوش آئند ہے




Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *