سفیرِ پاکستان راجہ علی اعجاز سے شبریز اختر سویہ کی وفد کے ہمراہ ملاقات




ریاض (وقار نسیم وامق) شبریز اختر سویہ سابقہ صدر پی ٹی آئی پنجاب ونگ نے راجا زاہد مسعود جنجوعہ سابقہ فنانس سیکرٹری پی ٹی آئی ریاض ریجن اور زاہد عمران وڑائچ ایگزیکٹو ممبر پی ٹی آئی ریاض سٹی نے سفیر پاکستان سعودی عرب جناب راجا علی اعجاز جنجوعہ سے ان کے آفس میں ملاقات کی ۔
ملاقات باقاعدہ شیڈول کے مطابق پہلے سے طے شدہ تھی اور تیس منٹ تک جاری رہی ۔
وفد کی سربراہی کرتے ہوئے جناب شبریز اختر سو یہ نے میٹنگ کا ایجنڈا پاکستانی سفیر کو پیش کیا ۔
راجا زاہد مسعود جنجوعہ نے اوبر کریم ڈرائیور فلیٹ کا سعودی گورنمنٹ سے معاہدہ کی ایک سال توسیع دلوانے پر سفیر پاکستان کا شکریہ ادا کیا ۔
شبریز اختر سویہ نے سوشل سیکٹر کے حوالے سے اوورسیز پاکستانی فاؤنڈیشن کو فعال کرنے اور پاکستانی کمیونٹی کے ساتھ روابط بڑھانے کی درخواست کی تاکہ زیادہ سے زیادہ ممبرشپ کی جا سکے ۔
شبریز اختر سویہ نے اوورسیز پاکستانیوں کو فارن ایکسچینج ریمنٹس کارڈ کے فوری اجراء کے متعلق بات کی تاکہ پاکستان آمد پر اوورسیز پاکستانیوں کو ڈیوٹی کریڈٹ کی سہولت میسر آ سکے ۔ سفیر پاکستان نے او پی ایف کارڈ اور فارن ایکسچینج ریمنٹس کارڈ کے اجراء کے لئے ہر ممکن تعاون کرنے کی یقین دہانی کروائی ۔ زاہد عمران وڑائچ کا کہنا تھا کہ انشورنس سرٹیفکیٹ کی تجدید کیلئے کوئی لائحہ عمل اختیار کیا جائے تاکہ ناگہانی صورت حال میں اوورسیز پاکستانی اس سے مستفید ہو سکیں ۔
شبریز اختر سویہ نے رسولین انجینئر آرگنائزیشن کا تعارف کروایا اور کہا کہ اس میں تمام پروفیشنل ممبران شامل ہیں جو جاب دلوانے اور نئے دوستوں کی مدد کرنے کیلئے اس فورم کو استعمال کرتے ہیں ۔ شبریز اختر سویہ نے آرگنائزیشن کی طرف سے سفیر پاکستان کو ستمبر میں ہونے والے ایونٹ میں دعوت دی جو سفیر صاحب نے قبول کر لی ۔ راجا زاہد مسعود جنجوعہ نے کمیونٹی کے ساتھ روابط کیلئے ایمبیسی کے آفیشل ایمیل ایڈریس اور آفیشل سوشل میڈیا کو ایکٹیو کرنے کی تجویز دی جس پر سفیر پاکستان نے غور کرنے کی مکمل یقین دہانی کروائی ۔ آخر میں شبریز اختر سویہ نے سفیر پاکستان کو وفد کی طرف سے دی جانے والی تجاویز میں دلچسپی پر ان کا شکریہ ادا کیا ۔
سفیر پاکستان نے تمام تجاویز کو مینٹس آف میٹنگ میں شامل کرنے کا ہدائت فرمائیں۔ جس کو شبریز اختر سویہ سابقہ صدر پی ٹی آئی پنجاب ونگ نے آفیشل جمع کروا دیا ہے ۔ امید کی جاتی ہے کی اس ملاقات کے دور رس نتائج ثابت ہوں گے ۔ جس سے ملکی زرمبادلہ میں خاطر خواہ اضافہ ہو گا ۔ اور اوورسیز پاکستانی بھی مہیا کی گئی سہولتوں سے فیضیاب ہو سکیں گے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *