bahu mujrim

ایک بہو نے لسی میں زہر ملا کر تیرہ سسرالیوں کو قتل کر دیا اور چودہ افراد کی حالت تشویشناک




ؒلاہور(آن لائن اخبار) ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ دولت پور میں ایک بہو نے پسند کی شادی نہ ہونے کی وجہ سے تیرہ سسرالیوں کو لسی میں زہر ملا کر قتل کر دیا۔دو دن پہلے مظفر گڑھ میں علی گڑھ کے علاقے دولت پور میں ۱۳ افراد زہریلی لسی کے پینے کی وجہ سے اپنے خالقِ حقیقی سے جاملے یہ واقعہ ایک معمہ بن گیا لیکن پولیس نے اس راز سے پردہ اٹھایا ہے اور ان سارے قتلوں کو مجرم بہوآسیہ کو قرار دیا گیا ہے۔ پولیس نے کہا کہ آسیہ اپنی پسند کی شادی کرنا چاہتی تھی مگر ایسا نہ ہو سکا تو اس نے اپنے سسرالیوں کو لسی میں زہر ملا کر پلا دیا جس سے ایک ہی خاندان تیرہ افراد دم توڑ گئے اور دنیا چھوڑ گئے۔ پولیس کے مطابق 13 افراد کی ہلاکت کے بعد پولیس نے خاندان کے زندہ بچ جانے والے افراد سے تفتیش شروع کی اور اسی سلسلے میں واقعے میں ہلاک ہوجانے والے امجد کی بیوی کو زیر حراست لیا گیا اور جب تفتیش شروع کی گئی توپتا چلا کہ سسرالیوں کو زہرملی لسی پلانے میں گھر کی بہو کا ہی ہاتھ ہے۔

پولیس کے مطابق 8 ماہ قبل آسیہ نامی خاتون کی شادی اس کی مرضی کے خلاف امجد سے ہوئی تھی اور آسیہ اپنی مرضی کی شادی کرنا چاہتی تھی۔ توآسیہ نے اپنے شوہر کو راستے سے ہٹانے کا مقصد بنایا اور اس مقصد کیلئے آسیہ نے اپنے شوہر کر دودھ میں زہر ملا کر دیا لیکن شوہر نے دودھ پینے سے انکار کر دیا تو وہی دودھ صبح لسی میں شامل کر لیا گیا جس سے اٹھائیس افراد متاثر ہوئے ہیں پولیس کے مطابق زہر اثر اس قدر شدید تھا کہ 2 روز میں 13 افراد کی موت واقع ہوچکی ہے اور تاحال 14 افراد ہسپتال میں زیر علاج ہیں۔ پولیس نے ملزمہ کے خلاف مقدمہ درج کرکے مزید تفتیش شروع کردی ہے اور ملزمہ کےعاشق کی گرفتاری کے لئے بھی چھاپے مارنے شروع کر دیئے گئے ۔




Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *