سفید چاول کا زیادہ استعمال صحت کے لئے خطرناک ہے، طبی تحقیق




سفید چاول کا زیادہ استعمال صحت کے لئے خطرناک ہے، طبی تحقیق

امریکا(مانیٹرنگ ڈیسک) سفید چاول، پاستا اور سفید ڈبل روٹی وغیرہ میں پائے جانے والا جز کاربوہائیڈریٹ صحت کے لیے نقصان دہ نہیں بلکہ جلد موت کا خطرہ کم کرتا ہے۔ یہ بات امریکا میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں سامنے آئی۔ ہارورڈ اسکول آف پبلک ہیلتھ کی تحقیق میں بتایا گیا کہ دہائیوں سے کہا جارہا تھا کہ کاربوہائیڈریٹس کا استعمال صحت کے لیے نقصان دہ ہوتا ہے تاہم اسے غذا سے نکال دینا جلد موت کا خطرہ بڑھا سکتا ہے۔ اس تحقیق کے دوران 15 ہزار سے زائد افراد کی غذائی عادات کا تجزیہ کرکے نتیجہ نکالا گیا کہ بہت  زیادہ مقدار میں اس جز کا استعمال ضرور صحت کو نقصان پہنچاتا ہے تاہم اعتدال میں رہ کر اس کا استعمال جلد موت کا خطرہ کم کرتا ہے، یعنی ہر وقت سفید چاول یا ڈبل روٹی کھانا جلد موت کا باعث بھی بن سکتا ہے۔ طبی جریدے لانسیٹ پبلک ہیلتھ جرنل میں شائع تحقیق میں بتایا گیا کہ متوازن غذا وہی ہے جس میں غذائی اجزاءکی مقدار اعتدال میں ہو۔ محققین کا کہنا تھا کہ درھقیقت کسی جز کو غذا سے مکمل طور پر نکال دینا صحت کو شدید نقصان پہنچا سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں غذا کا انتخاب کے حوالے سے احتیاط سے کام لینا چاہئے

گاجر کے جوس کے حیرت انگیز فوائد پڑھنے کے لئے یہاں کلک کریں

جیسے کم کاربوہائیڈریٹ والی غذا نقصان دہ ہوسکتی ہے جس کا رجحاج آج کل کافی عام ہوچکا ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ ہمارے ڈیٹا سے عندیہ ملتا ہے کہ اس جز کو غذا میں شامل نہ کرنا مختلف وجوہات کی بناءپر موت کا باعچ بن سکتا ہے۔ اس تحقیق کے دوران رضاکاروں کی غذائی عادات کا جائزہ 25 سال تک لینے کے بعد یہ نتیجہ نکالا گیا کہ بہت زیادہ یا بہت کم کاربوہائیڈریٹس صحت کے لیے نقصان دہ ہیں۔




Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *